تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

ad

نواز شریف جہلم کے جس ہوٹل میںمقیم رہے ،اس کا مالک کون نکلا؟

  12 اگست‬‮ 2017   |    06:39     |     پاکستان

اسلام آباد (نیوز ڈیسک)نواز شریف نے جہلم میں جس ٹیولپ ہوٹل میں قیام کیا اس کے ساتھ جڑا ایک سکینڈل آج بھی تاریخ کا حصہ ہے، معروف کالم نگار و تجزیہ کار ایاز امیر کی نجی ٹی وی سے پروگرام ’’میں گفتگو۔ تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی دنیا نیوز کے پروگرام ’’دنیا کامران خان کے ساتھ‘‘میں ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے معروف کالم نگار

و تجزیہ کار ایاز امیر کا کہنا تھا کہ نواز شریف اور ان کےرفقا نے جہلم میںجس ٹیولپ ہوٹل میں قیام کیا اس کے ایک ایسا پس منظربھی ہے جو نواز شریف کے ساتھ جڑا ہوا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ مہران بینک سکینڈل کے مرکزی کردار یونس حبیب نے اپنے انکشافات میں کہا تھا کہ انہوں نے سیاستدانوں میں رقم بانٹی تو نواز شریف کو بھی 33لاکھ روپے دئیے ۔ ایاز امیر کا کہنا تھا کہ بعد میں یونس حبیب نے اپنا بیان تفصیلات کے مطابق نواز شریف نے جہلم میں جس ٹیولپ ہوٹل میں قیام کیا اس کے ساتھ جڑا ایک سکینڈل آج بھی تاریخ کا حصہ ہے، معروف کالم نگار و تجزیہ کار ایاز امیر کی نجی ٹی وی سے پروگرام ’’میں گفتگو۔ تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی دنیا نیوز کے پروگرام ’’دنیا کامران خان کے ساتھ‘‘میں ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے معروف کالم نگار و تجزیہ کار ایاز امیر کا کہنا تھا کہ نواز شریف اور ان کےرفقا نے جہلم میںجس ٹیولپ ہوٹل میں قیام کیا اس کے ایک ایسا پس منظربھی ہے جو نواز شریف کے ساتھ جڑا ہوا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ مہران بینک سکینڈل کے مرکزی کردار یونس حبیب نے اپنے انکشافات میں کہا تھا کہ انہوں نے سیاستدانوں میں رقم بانٹی تو نواز شریف کو بھی 33لاکھ روپے دئیے ۔ ایاز امیر کا کہنا تھا کہ بعد میں یونس حبیب نے اپنا بیان بدلتے ہوئے کہا تھا کہ جس شریف کو رقم دی وہ ٹیولپ ہوٹل کے مالک ہیں، یہ والے شریف نہیں تھے۔بدلتے ہوئے کہا تھا کہ جس شریف کو رقم دی وہ ٹیولپ ہوٹل کے مالک ہیں، یہ والے شریف نہیں تھے۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
17%
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
8%
پسند ںہیں آئی
75%
اپنی رائے کا اظہار کریں -

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

انٹر نیٹ کی دنیا میں سب سے زیادہ پڑھے جانے والے مضا مین

loading...

تازہ ترین خبریں

تازہ ترین تصاویر


>