تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

ad

جے آئی ٹی ممبران سے عدالتی تحفظ واپس لینے کے لیے درخواست دائر

  12 ستمبر‬‮ 2017   |    01:18     |     تازہ ترین

لاہور (ویب ڈیسک ) پانامہ کیس کی تحقیقات کے لئے بننے والی جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم کے ممبران سے عدالتی تحفظ واپس لینے کیلئے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کر دی گئی ۔بیرسٹر ظفراللہ کی طرف سے سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں دائر درخواست میں کہا گیا ہے کہ سپریم کورٹ کے جسٹس آصف سعید کھوسہ پر مشتمل پانچ رکنی بنچ

نے پانامہ فیصلے میں جے آئی ٹی ممبران کو تحفظ فراہم کرتے ہوئے ان کے خلاف کسی قسم کی کاروائی سے قبل مانیٹرنگ جج سے اجازت لینا ضروری قرار دیا ہےجبکہ دوسری جے آئی ٹی ممبر عرفان منگی ے خلاف سپریم کورٹ میں کرپشن کا کیس زیر سماعت ہے،عرفان منگی ڈی جی نیب بلوچستان کے عہدے پر فائز ہیں، ظفر حجازی کے خلاف بھی جعلسازی کا مقدمہ درج ہے، لہٰذا معزز عدالت سے استدعا ہے کہ جے آئی ٹی ممبران کو سپریم کورٹ کی جانب سے دیا جانے والا تحفظ واپس لیا جائے۔پانامہ کیس کی تحقیقات کے لئے بننے والی جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم کے ممبران سے عدالتی تحفظ واپس لینے کیلئے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کر دی گئی ۔بیرسٹر ظفراللہ کی طرف سے سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں دائر درخواست میں کہا گیا ہے کہ سپریم کورٹ کے جسٹس آصف سعید کھوسہ پر مشتمل پانچ رکنی بنچ نے پانامہ فیصلے میں جے آئی ٹی ممبران کو تحفظ فراہم کرتے ہوئے ان کے خلاف کسی قسم کی کاروائی سے قبل مانیٹرنگ جج سے اجازت لینا ضروری قرار دیا ہےجبکہ دوسری جے آئی ٹی ممبر عرفان منگی ے خلاف سپریم کورٹ میں کرپشن کا کیس زیر سماعت ہے،عرفان منگی ڈی جی نیب بلوچستان کے عہدے پر فائز ہیں، ظفر حجازی کے خلاف بھی جعلسازی کا مقدمہ درج ہے، لہٰذا معزز عدالت سے استدعا ہے کہ جے آئی ٹی ممبران کو سپریم کورٹ کی جانب سے دیا جانے والا تحفظ واپس لیا جائے۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 
اپنی رائے کا اظہار کریں -

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

انٹر نیٹ کی دنیا میں سب سے زیادہ پڑھے جانے والے مضا مین

loading...

تازہ ترین خبریں

تازہ ترین تصاویر


>