تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

ad

پیپلز پارٹی کے 100 سے زائدکارکنان پارٹی سے بدظن ہوکر تحریک انصاف کی کشتی میں سوار

  13 ‬‮نومبر‬‮ 2017   |    11:02     |     تازہ ترین

لاہور(ویب ڈیسک)پیپلز پارٹی کے کونسلر سمیت دیگر 100 سے زائدکارکنان پارٹی سے بدظن ہوکر تحریک انصاف کی کشتی میں سوار ہوگئی۔تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی کے صوبائی وزیر و خوابوں کے شہنشاہ منظور وسان کا خواب ادھورا رہ گیا،پیپلز پارٹی کے کونسلر سمیت دیگر 100 سے زائدکارکنان پارٹی سے بدظن ہوکر تحریک انصاف کی کشتی میں سوار ہوگئے

۔تفصیلات کے مطابق سابق وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ کے قریبی ساتھی پیپلز پارٹی کے رہنماء اورسابق وزیر اعلیٰ سندھ ہائوس کے میونسپل کمیٹی وارڈ 6کے کونسلر سید ثابت علی شاہ،پیپلز پارٹی یونین کونسل وڈا ماچھیوں کے رہنمائوں عابد علی جاگیرانی،شہزادو جاگیرانی،ڈبر خیرپور کے معروف پٹھان،منور علی شاہ گادی نشین درگاہ یتیم شاہ و پی پی سٹی صدرخیرپور،حفیظ ارحمٰن بگھیو پی پی صدر یوسی بخاری،اسد چھجڑو سابق پی پی کونسلر،باسط علی جلبانی سماجی ورکر،محمد ہاشم رندپی پی رنماء تعلقہ کوٹ ڈیجی ،عامر کیھر،کامران شیخ،نعیم ابڑو،مجاہد جمانی نے اپنے سینکڑوں ساتھیوں مریدوں کے ہمراہ پاکستان تحریک انصاف سندھ کے رہنماء پیر سید سمیع اللہ شاہ راشدی،سکھر کے ڈویژنل صدرغلام عباس چاچڑ،سکھر ضلع صدرمبین احمد جتوئی،خیرپور پی ٹی آئی صدر سید شاکر شاہ،جنرل سیکرٹری ڈاکٹر واجد علی مھراور میڈیا کی موجودگی میں تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کیا گیا۔ واضح رہے کہ اس سے قبل پیپلزپارٹی کے سینیٹر بابر اعوان نے تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کی تھی۔ بابر اعوان نے سینٹ کی نشست سے استعفیٰ دیا تھا۔ بابر اعوان نے کہا کہ وقت آگیا ہے کہ میں حقیقی اپوزیشن جماعت میں شامل ہو جاؤں۔ اللہ نے میری رہنمائی کی۔ اکیس سال بعد پیپلزپارٹی کی بنیادی رکنیت سے استعفیٰ دے رہا ہوں۔ میں اپنی اور پوری فیملی کی طرف سے پاکستان کے مستقبل اور کپتان کو خوش آمدید کہتا ہوں۔ سینیٹر شپ چھوڑ کر تحریک انصاف میں شامل ہونا ایک چیلنج تھا۔ سابق وفاقی وزیر نے کہا کہ تبدیلی گھر بیٹھے نہیں آئے گی۔ انصاف کے حصول کیلئے وزارت چھوڑ دی۔ میرا ایجنڈا اقتدار ہوتا تو 2018ءتک سینیٹر رہتا۔ ان کا کہنا تھا کہ وکلاءاور میڈیا کا احسان کبھی نہیں بھلا سکتا۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
100%
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 
اپنی رائے کا اظہار کریں -

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

انٹر نیٹ کی دنیا میں سب سے زیادہ پڑھے جانے والے مضا مین

loading...

تازہ ترین خبریں

تازہ ترین تصاویر


>