تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

داعش کی جانب سے مسلم لیگ ن کی ریلی پرخودکش حملے کا خطرہ

داعش کی جانب سے مسلم لیگ ن کی ریلی پرخودکش حملے کا خطرہ

  11 اگست‬‮ 2017   |    12:22     |     پاکستان

لاہور (ویب ڈیسک)حساس ادارے نےآگاہ کیا ہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف پاکستان میاں محمد نواز شریف کی ریلی کےدوران کالعدم تنظیم داعش کی طرف سے داہشت گردی کی واردات ہو سکتی ہے ، حملہ خود کش یا فزائی ہو سکتا ہے ۔حساس ادارے نے چیف سیکرٹری پنجاب ، ہوم سیکرٹری پنجاب ، سیکرٹری وزیراعلی پنجاب کو تحریری طور پر اگاہ کر دیا

ہے ۔مراسلہ میں کہا گیا ہے کہ اگر ریلی وجلسہ منسوخ نہیں ہو سکتا تو تمام روٹ اور عوامی اجتماعات پر سکیورٹی کے فول پروف انتظامات کئیے جائیں ،۔تفصیلات کے مطابق مراسلہ نمبرU.O.NO.1586.89 میں چیف سیکرٹری پنجاب کیپٹن (ر) زاہد سعید ، ایڈیشنل چیف سیکرٹری ہوم میجر (ر) اعظم سلمان اور سیکرٹری ٹو وزیراعلی پنجابامداد اللہ بو سال کو آگاہ کر گیادیا ہے کہ اطلاعات کے مطابق کہ داعش سابق وزیر اعظم کی ریلی پر خود کش حملہ کر سکتی ہے ، اس ریلی و جلسہ کو یا تو منسوخ کیا جائے اور اگر منسوخ نہیں کیا جا سکتا ہے تو روٹ اور دیگر مقامات پر تو سکیورٹی کے فول پروف انتظامات کئے جائیں ۔ذرائع کے مطابق اس مراسلہ کے بعد سابق وزیراعظم کی سکیورٹی انتہائی سخت کر دی گئی ہے ، جہلم کے مقام پر ان کے خطاب کے دوران کمانڈوز کی بھاری نفر ی نے انہیں چاروں طرف سے گھیرے رکھا تھا، جبکہ روٹ کے دوران بھی ان کی گاڑیوں کو پولیس کمانڈوز کی جانب سے سخت پہرے میں لایا جا رہا ہے۔ ذرائع کے مطابق حفاظتی خطرات کے حوالے سے سابق وزیراعظم میاں محمد نواز شریف کو بھی آگاہ کر دیا گیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق کہ داعش سابق وزیر اعظم کی ریلی پر خود کش حملہ کر سکتی ہے ، اس ریلی و جلسہ کو یا تو منسوخ کیا جائے اور اگر منسوخ نہیں کیا جا سکتا ہے تو روٹ اور دیگر مقامات پر تو سکیورٹی کے فول پروف انتظامات کئے جائیں ۔ذرائع کے مطابق اس مراسلہ کے بعد سابق وزیراعظم کی سکیورٹی انتہائی سخت کر دی گئی ہے ، جہلم کے مقام پر ان کے خطاب کے دوران کمانڈوز کی بھاری نفر ی نے انہیں چاروں طرف سے گھیرے رکھا تھا، جبکہ روٹ کے دوران بھی ان کی گاڑیوں کو پولیس کمانڈوز کی جانب سے سخت پہرے میں لایا جا رہا ہے۔ ذرائع کے مطابق حفاظتی خطرات کے حوالے سے سابق وزیراعظم میاں محمد نواز شریف کو بھی آگاہ کر دیا گیا ہے۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 
اپنی رائے کا اظہار کریں -

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

تازہ ترین خبریں

تازہ ترین تصاویر


>