تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

فیض آباددھرنے کے خلاف آپریشن میں کوئی ہلاکت نہیں ہوئی ،راناثناء اللہ

فیض آباددھرنے کے خلاف آپریشن میں کوئی ہلاکت نہیں ہوئی ،راناثناء اللہ

  28 ‬‮نومبر‬‮ 2017   |    10:46     |     تازہ ترین

اسلام آباد(ویب ڈیسک)وزیرقانون پنجاب راناثناء اللہ نے کہاہے کہ فیض آباددھرنے کے خلاف آپریشن میں کوئی ہلاکت نہیں ہوئی ،ہلاکتیں کسی اورمقام پرہوئیں ،تعین کرناباقی ہے ،معاہدے میں فوج کی شمولیت حدسے تجاوزہے ،مسلم لیگ ن میں کوئی دراڑموجودنہیںہے۔پیرکے روزنجی ٹی وی سے گفتگوکرتے ہوئے انہوںنے کہاکہ مسلم لیگ ن

میں دراڑوں کی باتیں توکی جارہی ہیں لیکن یہ دراڑنظر نہیںآرہی ،کل سے نئی بات کی جارہی ہے کہ حمیدالدین سیالوی صاحب جوایم پی اے ہیں مسلم لیگ ن کے حمیدالدین سیالوی ایک درویش بزرگ ہیں ۔انہوںنے دھرنے کے خلاف آپریشن پرناراضگی کااظہارکیا۔حمیدالدین نے ہمیں وقت دیاکہ معاملہ افہام وتفہیم سے حل کیاجائے ،کسی ایم پی اے نے استعفیٰ نہیں دیا،جہاں تک طاہراقبال کی بات ہے ،طاہراقبال کئی بارمسلم لیگ چھوڑگئے اورالیکشن کے قریب واپس مسلم لیگ ن میں آگئے ۔انہوںنے کہاکہ فیض آبادآپریشن کے دوران کسی کی ہلاکت نہیں ہوئی ،آپریشن میں کسی اہلکارکواسلحہ لے جانے کی اجازت نہیں تھی ،یہ طے ہوناباقی ہے کہ ہلاکتیں کس مقام پرہوئیں ۔راناثناء اللہ نے کہاکہ حکومت کے اندرفیض آباددھرنے سے متعلق دورائے تھیں کہ معاملہ مذاکرات سے حل کیاجائے اورطاقت کے استعمال سے گریزکیاجائے ،دوسری رائے یہ تھی کہ دھرنے والوں کایہ کوئی طریقہ نہیں ہے کہ اس طرح سے مطالبات تسلیم کرائے جائیں ،دھرنے والوں سے متعددبارمذاکرات کئے گئے،علماء مشائخ کی کمیٹی نے بھی دھرنے والوں سے بات کی عدالتی فیصلے کے بعدآپریشن کیاگیا،آپریشن کامیاب نہ ہواتودوبارہ مذاکرات کئے گئے جس میں وزیراعلیٰ پنجاب نے اہم کرداراداکیا،حامدخان کوشہبازشریف نے قائل کیاکہ وہ استعفٰی دیں۔انہوںنے کہاکہ دھرنے کے معاملے پرمیاں نوازشریف نے یہی مؤقف اختیارکہ معاملہ افہام وتفہیم سے حل کیاجائے ،عدالتی حکم نہ آتاتومعاملہ آپریشن کے بغیرممکنہ طورپرحل ہوجاتا،معاہدے میں فوج کی شمولیت حدسے تجاوزہے ،فوج کواس معاملے میں شامل نہیں ہوناچاہئے تھے ،کچھ لوگ شاہ سے زیادہ شاہ کے وفادارہیں ،یہ لوگ حکومت کوکوئی کریڈٹ دینانہیں چاہتے اس لئے فوج کوبیچ میں لایاگیا

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 
اپنی رائے کا اظہار کریں -

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

پاکستان خبریں

تازہ ترین خبریں

تازہ ترین تصاویر


>