تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

پنجاب پولیس کے یونیفارم کے کپڑے پر ایک ارب 35 کروڑ روپے لگے ، 8لاکھ میٹر کپڑا خریدا گیا

پنجاب پولیس کے یونیفارم کے کپڑے پر ایک ارب 35 کروڑ روپے لگے ، 8لاکھ میٹر کپڑا خریدا گیا

  8 دسمبر‬‮ 2017   |    07:00     |     پاکستان

لاہور: (ڈیلی آزاد) پنجاب پولیس کی نئی یونیفارم پر کتنا کپڑا لگا اور کس خاص فرم کو فائدہ پہنچایا گیا انویسٹی گیشن ٹیم مزید حقائق سامنے لے آئی۔ تفصیلات کے مطابق پنجاب پولیس کی نئی یونیفارم بنانے کے لیے ایک لاکھ 77 ہزار افسروں اور اہلکاروں کے لیے 8 لاکھ میٹر کپڑا خریدا گیا۔ یونیفارم کی تبدیلی پر پنجاب پولیس کے یونیفارم کے کپڑے پر ایک ارب 35 کروڑ روپے لگے۔

15 کروڑ روپے ٹوپی اوربیلٹ کی خریداری پر لگائے گئے۔ذرائع کے مطابق پنجاب پولیس کے یونیفارم کی خریداری ایک معروف بزنس مین کی فرم سے کی گئی ۔ فائنل ٹینڈز کیلئے سابق اے آئی جی لاجسٹک ہمایوں بشیر تارڑ نے نشاط ٹیکسٹائل اور ارشد ٹیکساٹل کو منتخب کیا، دونوں فرمز کا ایک ہی مالک ہے پنجاب پولیس کی یونیفارم نشاط گروپ سے خریدی گئی ۔ پٹرولنگ پولیس سپیشل پروٹیکشن یونٹ اور ایلیٹ فورس کی وردی ارشد ٹیکساٹل سے لی گئی تاکہ عام شہری شک نہ کریں کہ کپڑے کی خریداری ایک ہی فرم سے کی گئی ہے ۔ ذرائع کے مطابق یونیفارم تبدیل کرکے اربو ں روپے کے ضیاع کے بعد اب پھر پنجاب پولیس پرانی یونیفارم کی طرف جا رہی ہے جسکا فیصلہ مارچ میں ہو گا ۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 
اپنی رائے کا اظہار کریں -

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

پاکستان خبریں

تازہ ترین خبریں

تازہ ترین تصاویر


>