تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

 مارگلہ ہلز پر بندروں کی تعداد بڑھ رہی ہے، سپیکر قومی اسمبلی کا وزارت داخلہ سے متعلق جوابات نہ آنے پر سخت برہمی کا اظہار

مارگلہ ہلز پر بندروں کی تعداد بڑھ رہی ہے، سپیکر قومی اسمبلی کا وزارت داخلہ سے متعلق جوابات نہ آنے پر سخت برہمی کا اظہار

  8 دسمبر‬‮ 2017   |    08:29     |     پاکستان

اسلام آباد: (ڈیلی آزاد) سپیکر قومی اسمبلی کا وزارت داخلہ سے متعلق جوابات نہ آنے پر سخت برہمی کا اظہار، سیکرٹری داخلہ کی طلبی، طلال چودھری کو ڈانٹ پڑ گئی، ایوان میں صرف 20 اراکین۔ دوران کارروائی رکن قومی اسمبلی نفیسہ خٹک نے سوال اٹھایا کہ مارگلہ ہلز پر نیشنل پارک کے تحفظ کے لیے کیا اقدامات کیے جا رہے ہیں؟ مارگلہ ہلز پر بندروں کی تعداد بڑھ رہی ہے۔وزیر مملکت برائے داخلہ نے فوری جواب دیا کہ قوانین کی خلاف ورزی پر باقاعدہ ایکشن لیا جاتا ہے لیکن ایسا کوئی نظام نہیں کہ بندروں کے اسلام آباد داخلے پر پابندی لگائی جائے۔

وقفہ سوالات کے دوران وزارت داخلہ سے متعلق سوالات کے جواب نہ آنے پر سپیکر نے سخت برہمی کا اظہار کیا اور جوائنٹ سیکرٹری اور سیکشن افسر وزارت داخلہ کو گیلری سے نکال دیا۔سپیکر نے کہا کہ ایوان کے آج کے دن کا خرچہ کیوں نا سیکرٹری داخلہ سے وصول کیا جائے؟ ایسا ہی چلتا رہا تو وزیر اعظم سے کہوں گا کہ غیر ذمہ دار حکام کو ہٹا دیں۔وزیر مملکت برائے داخلہ طلال چودھری نے کہا کہ کچھ ایسے سوالات ہیں جن کے جوابات صوبوں سے درکار ہیں جس پر سردار ایاز صادق نے کہا کہ اکثر سوالات کا صوبوں سے کوئی تعلق نہیں بنتا۔پی ٹی آئی کی رکن شیریں مزاری نے کہا کہ وزارت داخلہ نے کئی اجلاسوں میں جوابات نہیں دیے۔ وزیر داخلہ کو اس غیر ذمہ داری کا مرتکب ٹھہرایا جائے۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
100%
اپنی رائے کا اظہار کریں -

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

پاکستان خبریں

تازہ ترین خبریں

تازہ ترین تصاویر


>