تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

وزیر اعلیٰ شہباز کے معرکوں میں شاندار اضافہ ، اعلیٰ حکمت عملی کے مالک شہباز شریف کواو آئی سی کے اجلاس میں خصوصی شرکت کی دعوت۔۔۔!!

وزیر اعلیٰ شہباز کے معرکوں میں شاندار اضافہ ، اعلیٰ حکمت عملی کے مالک شہباز شریف کواو آئی سی کے اجلاس میں خصوصی شرکت کی دعوت۔۔۔!!

  12 دسمبر‬‮ 2017   |    07:24     |     پاکستان

یروشلیم کو اسرائیل کا دارلحکومت بنانے کا امریکی صدر کا فیصلہ پوری امت مسلمہ کے لئے ناقابل قبول ہے۔ اس سنجیدہ مسلے کے حل کے لئے او آئی سی نے فوری ہنگامی اجلاس 13 دسمبر کو طلب کیا ہے۔جس میں پاکستان، ترکی،سعودی عرب، افغانستان، مصر، لیبیا،ایران، انڈونیشیا،کویت، ملئشیا، فلسطین، عراق، بنگلہ دیش اورشامسمیت 57اسلامی ممالک کے سربراہان شرکت کریں گے۔

او آئی سی کے اس ہنگامی اجلاس میں پاکستان کو یہ اعزاز حاصل ہوا ہے کہ بین الاقوامی نوعیت کی اس مذہبی اور سیاسی کشیدگی کے حل کے لئے پاکستا ن سے وزیر اعظم کے ہمراہ ایک اور اہم شخصیت کو دعوت دی گئی ہے جسکی سمجھداری اور دانشوری کے قائل مسلم اور غیر مسلم ممالک کے حکام ، اعلیٰ عہدیدران اور عوام بھی ہے۔او آئی سی کی جانب سے پاکستان سے وزیر اعظم شاہد خانقان عباسی کے ساتھ ساتھ وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف کو بھی اجلاس میں شرکت کی دعوت دی گئی ہے۔ وزیر اعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف کی قابلیت اور حکمت عملی کو نہ صرف پاکستان بلکہ بین الاقوامی سطح پرسراہا جاتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ وزیر اعلیٰ شہبا ز شریف دنیاکے واحد صوبائی وزیراعلیٰ ہیں جو 13 دسمبر کو استنبول میں منعقد کیے جانے والے او آئی سی کے اجلاس میں شرکت کر رہے ہیں۔ اس سے قبل او آئی سی کے اجلاس اور تقاریب میں تمام ممبر سٹیٹ کے و زیر اعظم شرکت کرتے تھے۔ وزیر اعلیٰ شہباز شریف اپنی ذہانت او عقل و شعو ر کی بدولت بین الاقوامی سطح پر پاکستان کی نمائندگی کئی بار کر چکے ہیں۔ ہر پلیٹ فارم پر وزیر اعلیٰ شہباز شریف کی بہترین کارکردگی اور مثبت اقدامات کو پاکستان سمیت دوسرے ممالک میں بھی خوب پسند کیا جاتا ہے۔ یروشلیم کو اسرائیل کا دارلحکومت بنانے کے امریکی صدر ٹرمپ کے فیصلے کی سب سے پہلے مذمت بھی وزیراعلی ٰ پنجاب نے کی تھی۔ جیسے ہی انٹرنیشنل میڈیا کے ذریعے امریکی صدر ٹرمپ کافیصلہ منظر عام پر آیا ۔ وزیر اعلیٰ شہباز شریف نے فوری طور پر اس فیصلے پر برہمی کا اظہار کیا اور برملا اعلان کیا کہ مسلمانوں کے مقدس مقامات پر کسی طرح کا سمجھوتا نہیں کیا جائے گا۔ جبکہ انہوں نے سماجی رابطے کی ویب سائٹس پر مفکر پاکستان علامہ اقبال کے خطبہ الہ باد کا حوالہ بھی دیا جس میں علامہ اقبال نے فلسطین سے یہودیوں کی لاتعلقی کا ذکر کیا تھا۔ او آئی سی میں وزیر اعلیٰ پنجاب کی شرکت کی دوسری بڑی وجہ پاکستان اور ترکی کے دوستانہ تعلقات ہیں۔ اس ہنگامی اجلاس کی میزبانی ترک صددر طیب اردگان کر رہے ہیں۔ ترکی میں یویز سلطان سلیم پل کے افتتاح کے موقع پر دنیا کے مختلف ممالک کے سربراہاں نے تقر یب میں شرکت کی مگر ترک حکومت کی جانب سے وزیر اعلیٰ شہباز شریف کو شرکت کی خصوصی دعوت دی گئی۔ پاکستان کی بین القوامی ساکھ اور پہچان کے حوالے سے جب بھی کہیں کو ئی تقریب منعقد کی جاتی ہے تو وزیر اعلیٰ شہباز شریف کو تقریب کا اہم جز سمجھا جاتا ہے۔ بیجنگ میں ون بلٹ ون روڈ سیمینار کے موقع پر وزیر اعظم سمیت کئی وزرا موجود تھے، مگر وزیراعلیٰ شہباز شریف کواس پروجیکٹ کے حوالے سے اپنے خیالات کا اظہار کرنے کاخاص موقع دیا گیا۔ وزیر اعلیٰ شہباز بلاشبہ اعلیٰ حکمت عملی کے مالک ہیں، اس بات کا اعتراف پاکستان سمیت دیگر ممالک بھی کرتے ہیں۔او آئی سی کے بین الاقوامی اجلاس میں وزیر اعلیٰ شہباز شریف کی شرکت اس بات کا منہ بولتا ثبوت ہے۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 
اپنی رائے کا اظہار کریں -

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

پاکستان خبریں

تازہ ترین خبریں

تازہ ترین تصاویر


>