نیویارک برطانوی گلوکارہ اڈیل کی نئی البم”ٹوینٹی فائیو“ کی ریلیز کے بعد ص" /> Daily Azad
تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

شاعر نوشی گیلانی

نوشی گیلانی14مارچ 1964کو بہاولپور میں پیدا ہوئیں۔ انھوں نے بہاولپوریونیورسٹی سے گریجویشن کی جبکہ اردو ادب ، اقبالیات اور فارسی میں ماسٹر ڈگری حاصل کی۔ 1995میں وہ امریکہ چلی گئی اور2008میںشادی کے بعد آسٹریلیا چلی گئی۔نوشی غزل کی شاعرہ ہیں ۔ ان کی پانچ کتب شائع ہو چکی ہیں۔ جبکہ ان کی بہت سے نظموں کے انگریزی میں بھی ترجمے ہو چکے ہیں۔ نوشی گیلانی نے آسٹریلین شاعر Les Murray کی شاعری کو اردو میں ترجمہ کیا ہے۔ نوشی گیلانی اردو اکیڈمی آسٹریلیا کی شریک بانی بھی ہیں۔

"نوشی گیلانی " کی شاعری

1 - نام لے لے کر نہ میرا شہر کی نظروں میں آ

2 - مرے خلاف ہوا ہے تو اس کا ڈر بھی نہیں

3 - محبتیں جب شمار کرنا تو سازشیں بھی شمار کرنا

4 - نہ کوئی خواب نہ سہیلی تھی

5 - رکتا بھی نہیں ٹھیک سے چلتا بھی نہیں ہے

6 - تری خوشبو نہیں ملتی، ترا لہجہ نہیں ملتا

7 - سب اپنی ذات کے اظہار کا تماشا ہے

8 - تم نے یہ کہہ دیا کہ محبت نہیں ملی

9 - وہ کیسا خوف تھا کہ رختِ سفر بھی بھول گئے

10 - وہ بات بات میں اتنا بدلتا جاتا ہے

11 - وہ بے ارادہ سہی، تتلیوں میں رہتا ہے

12 - کُچھ بھی کر گزرنے میں دیر کِتنی لگتی ہے

13 - محبتیں جب شمار کرنا تو سازشیں بھی شمار کرنا

           
>