تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

ad

مولانا طارق جمیل نےاپنے ایک بیان میں کہا آپ نے رنگیلا کا نام سنا ہو گا

  8 ‬‮نومبر‬‮ 2017   |    07:33     |     ڈیلی آزاد سپیشل

مولانا طارق جمیل نےاپنے ایک بیان میں کہا آپ نے رنگیلا کا نام سنا ہو گا وہ مزاحیہ اداکار تھے ۔ 1996میں بہت سے فنکاروں کے درمیان رہاں ہوں ان سے بات بھی کی ۔ مولانا طارق جمیل نے کہا کہ میں نے ایک دن بیان شروع کیا تو دیکھا کہ رنگیلا تھوڑی بعد رونا شروع ہو گئے ۔ وہ زرو قطار رو رہے تھے ۔ جب بیان ختم ہوا تو وہ کھڑے ہو کر کہنے لگے میرے بھی تین دن لکھو

میں تین دن تبلیغ میں جائوں گا ۔ کہنے لگے میں نیپال گیا وہاں ایک ہماری فلم کی شوٹنگ تھی ، وہاں ایک مندر ہے جہاں صرف ہندو جاسکتے ہیں۔ مسلمان، سکھ اور عیسائی نہیں جاسکتے ۔ میرے دل میں خیال آیا کہ میں جا کر دیکھوں کے اندر کیا ہے تو میں نے میک اپ مین سے کہا کہ مجھے پنڈت بنائو ۔ جب میک اپ مین نے مجھے تیار کر دیا تو میں دو پیلے کپڑے اور دو لکڑی کے کڑے اور جوتا بھی پنڈت جیسا اور کچھ پیسے ساتھ لے لیے ۔ جب میں مندر کے دروازے پر پہنچا تو میں نے نعرہ لگایا ’’ ہرے رام ‘‘ اور نعرہ لگایا ’’جے مہاراج جی کی ‘‘۔ ان کے ساتھ سارے گیٹ کیپر نے بھی نعرہ لگایا ۔ ان کا کہنا تھا کہ جب میں پنڈتوں کے چال سے چلا تو لوگ آکر میرے پائوں چھونے لگے اور یہ پیسے ان پر پھینکنے لگے لوگ اور ان کی طرف آنے لگے کہ یہ تو کوئی بہت پہنچے ہوئے ہیں ۔ رنگیلا نے بتایا کہ میں تھوڑی دور گیا تو میرا کلیجہ نکل کر باہر آنے لگا ۔ میں نے آگے دیکھا کہ ایک بڑی سے سونے سے بنی ہوئی گائے تھی ۔ اور سارے ہندو اس کو سجدہ کر رہے تھے ۔ یہ دیکھتے ان کے ہوش اڑ گئے کہ اب کیا کروںدل میں خیال آیا کہ اگر سجدہ کرتا ہوں تو ایمان سے جاتا ہوں اور اگر نہیں کرتا تو جان سے جاتا ہوں ۔ وہ عجیب کشمکش میں پھنس چکےتھے ۔ بھر حال میں نے خود کو سنبھالا اور چلتا گیا ۔ جب قریب پہنچا تو میں اللہ تعالیٰ سے کہا کہ ’’یا اللہ تو گواہ رہنا کہ میں تجھے سجدہ کر رہا ہوں گائے کو نہیں ۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
75%
ٹھیک ہے
25%
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 
اپنی رائے کا اظہار کریں -

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

ڈیلی آزاد سپیشل

تازہ ترین خبریں

تازہ ترین تصاویر


>