تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

ad

ٹیلنٹ ہنٹ پروگرام، فرنچائز مالکان نے پی سی بی کے اشتراک کی مخالفت کردی

  14 ‬‮نومبر‬‮ 2017   |    03:43     |     کھیل

لاہور(ویب ڈیسک)پاکستان کرکٹ بورڈ(پی سی بی )پی ایس ایل فرنچائزوں کے ساتھ ٹیلنٹ ھنٹ پروگرام کرانا چاہتا تھا لیکن فرنچائز مالکان نے اپنے ٹیلنٹ ھنٹ پروگرام کو بورڈ کے اشتراک سے کرانے سے انکار کر دیا ہے ۔پاکستان کرکٹ بورڈ کے ڈائریکٹر کرکٹ ہارون رشید نے تجویز دی کہ تمام فرنچائز اپنے ٹیلنٹ ھنٹ پروگرام کو بورڈ کے اشتراک سے کرائیں

اور پاکستان کرکٹ بورڈ بھی اس اسکیم میں برابر کا پیسہ لگانے کو تیار ہے۔لیکن فرنچائز مالکان کا کہنا ہے کہ ہم نے اپنے اسپانسرز کے ساتھ مل کر یہ اسکیم ڈیزائن کی ہے، یہ ممکن نہیں ہے کہ ہم اس منصوبے میں بورڈ کو ساتھ ملائیں۔فرنچائز مالکان کا مزید کہنا ہے کہ کرکٹ بورڈ پہلے ہی ٹیلنٹ ھنٹ منصوبوں پر کام کرتا ہے، وہ علیحدہ اپنے منصوبوں کو جاری رکھے، پاکستان کرکٹ بورڈ کئی سالوں سے یوتھ ڈیولپمنٹ پروگرام کرارہا ہے، اس لئے فرنچائز اس کام میں کسی کو ساتھ ملانے کے لئے تیار نہیں ہیں۔ہارون رشید نے یہ بھی کہا کہ اگر کوئی فرنچائز دس لاکھ روپے لگاتی ہے تو ہم اس میں برابر پیسہ دیں گے، فرنچائزوں کا کہنا تھا کہ وہ اپنے پروگرام میں کسی کو شراکت نہیں دے سکتے اور آزادانہ کام کرنا چاہتے ہیں۔لاہور قلندرز کے علاوہ پشاور زلمی،کراچی کنگز،کوئٹہ گلیڈی ایٹرز اور اسلام آباد یونائیٹیڈ بھی الگ الگ پلیئرز ڈیولپمنٹ پروگرام چلارہے ہیں۔لاہور قلندرز نے اپنے پروگرام کے ذریعے پنجاب سے ڈیڑھ لاکھ سے زائد بچوں کے ٹرائلز لئے تھے اور بہترین کھلاڑیوں کا ایک ٹورنامنٹ بھی کرایا تھا۔پاکستان سپر لیگ فرنچائزوں نے متفقہ طور فیصلہ کیا ہے کہ کھلاڑیوں کے لئے مختص معاوضے کی رقم میں 25 ہزار روپے کا اضافہ کیا جائے۔ لاہور میں پاکستان کرکٹ بورڈ اور فرنچائز مالکان کے درمیان ہونے والی میٹنگ کے بعد بورڈ کے اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ کھلاڑیوں کے لئے رکھی گئی معاوضے کی رقم میں اضافے کی منظوری دے دی گئی۔ذرائع کا کہنا ہے کہ لاہور قلندرز نے اپنے ڈیولپمنٹ پروگرام سے ایک کھلاڑی کو پی ایس یل میں شامل کرنے کے لئے اضافے کی منظوری مانگی تھی جس کے بعد ٹیموں کو بیس کے بجائے 21 کھلاڑی منتخب کرنے کی بھی اجازت دے دی ہے۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 
اپنی رائے کا اظہار کریں -

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

تازہ ترین خبریں

تازہ ترین تصاویر


>