تازہ ترین :

شروع اللہ کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم والا ہے ِ

الم ﴿۱﴾یہ کتاب (قرآن مجید) اس میں کچھ شک نہیں (کہ کلامِ خدا ہے۔ خدا سے) ڈرنے والوں کی رہنما ہے ﴿۲﴾ جو غیب پر ایمان لاتے اور آداب کے ساتھ نماز پڑھتے اور جو کچھ ہم نے ان کو عطا فرمایا ہے اس میں سے خرچ کرتے ہیں 

ad

پاکستان کرکٹ کے معرو ف باولر سعید اجمل نے کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کرتے ہوئے

  29 ‬‮نومبر‬‮ 2017   |    10:23     |     کھیل

اسلام آباد( ڈیلی آزادنیو زڈیسک)پاکستان کرکٹ کے معرو ف باولر سعید اجمل نے کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کرتے ہوئے یہ سو ا ل اٹھا یا ہے کہ بائو لنگ ایکشن پر صرف پاکستان کو ہی کیوں نشان بنایا جا رہا ہے؟ انہو ں نے کہا کہ اللہ تعالیٰ نے اپنی مہربانی سے فیصل آباد کے ایک عام سے کھلاڑی کو عالمی سطح پرنمبرون باولر بنایا ، میرے ایکشن کے مسئلہ کے

دوران پی سی بی نے میری بہت مدد کی، آئی سی سی نے ایکشن کے حوالے سے جو قانون بنا یا ہوا ہے اس میں پاس ہونا بڑا مشکل ہے،باولنگ ایکشن پر صرف پاکستان کو کیوں نشان بنایا جا رہا ہے؟پی سی بی کو اس بارے میں سنجیدہ ہو کر سوچنا ہوگا جبکہ میں آج بوجھل مگر مطمئن دل کیساتھ ہر طرز کی کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کر تاہوں ،صرف غیر ملکی ٹی 20لیگ میں شرکت کرونگا ۔گذشتہ روز پنڈی کرکٹ سٹیڈیم میں ایک پر ہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سعید اجمل نے کہا کہ سب سے پہلے میں اللہ تعالی کا شکر گزار ہوں جس نے مجھے اتنی عزت اور شہرت سے نوازا ۔یہ اللہ کی خصوصی مہربانی ہی تھی جس نے فیصل آباد کے ایک عام سے کھلاڑی کو عالمی سطح پرنمبرون باولر بنایا بلکہ اس قابل بھی بنایا کہ وطن عزیز کا نام سر بلند کر سکوں۔ میں نے اپنے کیریئر کے دوران پاکستان کی کامیابیوں کیلئے ہر ممکن کردار ادا کر نے کی کوشش کی اور میں اس میں کس حد تک کامیاب بھی رہا اس کا فیصلہ آپ صحافی دوست بہتر طور پر کر سکتے ہیں۔ میرے کرکٹ کیریئر کے دوران پاکستان کرکٹ بورڈ،میرے ریجن فیصل آباداورمیرے کلب مسلم جمخانہ کرکٹ کلب جہاں سے میں نے کرکٹ کا آغاز کیا اور میر ے والدین ،بہن بھائی ،میری بیوی کی دعاوں اور خصوصی طور میرے کلب کے کوچ وقار احمد خان اور صابر حسین میرے مخلص دوست نے میرا بھرپور ساتھ دیا ،میں ان سب کا بہت شکریہ ادا کرتا ہوں ۔(اس موقع پر سعید اجمل آبدیدہ ہو گئے)۔انہوں نے کہا کہ اپنے والدین اور دوست احباب کے بغیر سعید اجمل کا عالمی کرکٹ کے آسمان پر بڑا اسٹار بننا ممکن نہیں تھا ۔اس موقع پر پاکستان کے کامیاب ترین کپتان مصباح الحق اور تمام ساتھی کھلاڑیوں کا بھی شکرگزار ہوں جن کی مدد اوراعتماد کے بغیرکامیابیاں ممکن نہ ہوتیں،مصباح الحق میرا اچھا دوست تھا اور رہے گا۔جب میرے ایکشن کا مسئلہ ہوا تو وہ میرے لیئے مشکل وقت تھا،اس دوران پی سی بی نے میری بہت مدد کی لیکن مجھے ویسے نہیں کھلایا گیا جیسے کھلایا جانا تھا ،میرا ایکشن کلیئر کرانے میں این سی اے اور اینالسٹ ٹیم کا بہت کردار رہا جس پر میں ان کابہت مشکور ہوں خصوصی طور پر میں شاہد اکرم کا بہت مشکور ہوں جنہوں نے میری بہت مدد کی۔میں آج بوجھل مگر مطمئن دل کیساتھ ہر طرز کی کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کر تاہوں ،صرف غیر ملکی ٹی 20لیگ میں شرکت کرونگا مگر کرکٹ سے محبت کا یہ تعلق سعید اجمل انٹرنیشنل کرکٹ اکیڈمی کی شکل میں جاری رہے گاجہاں فیصل آباد اور ملک بھر کے نوجوان کھلاڑیوں کو اپنی زیر نگرانی تربیت دیکر پاکستان کرکٹ کو نئے سٹار فراہم کرنے کی کوشش کرونگا۔پاکستان میں بے پنا ٹیلنٹ موجود ہے اور اس وقت بھی 25سے30باولرز موجود ہیں،آئی سی سی سب کی طرف توجہ دے ۔،محمد حفیظ کی باولنگ میں اتنا کوئی مسئلہ نہیں ہے صرف پاکستان کو کیوں نشانہ بنایا جا رہا ہے ،پی سی بی اس پر آواز اٹھائے۔انہوں نے کہا کہ میں اپنی خوشی سے ریٹائر منٹ لے رہا ہوں مجھے پی سی بی یا اور کسی سے کوئی شکوہ نہیں ہے ،میں ٹیم پر بھی بوجھ نہیں بننا چاہتاتھا۔سعید اجمل نے کہا کہ 2009کا ٹی 20ورلڈ کپ مجھے ہمیشہ یاد رہے گا،ہاشم آملہ کو 96رنز پر آوٹ کرنا نہیں بھولے گا ،میں اپنی کارگردگی پر مطمئن ہوں اور میں نے کبھی بھی کپتان بننے کی خواہش نہیں کی ۔انہوں نے کہا کہ میں اسلام آباد یونائیٹڈ کا مشکور ہوں جنہوں نے مجھے کوچ کی ذمہ داری سونپی۔آخر میںانہوں نے تمام صحافی حضرات ، اخبارات اور ٹی وی چینلزکا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ میں ان کا بے حد ممنون ہوں جنہوں نے میرے کیرئیر کے دوران میری اچھی کارکردگی کی تعریف کی اور میری غلطیوں کی نشاندہی کر کے آگے بڑھنے میں میری مدد کی ۔۔۔۔۔ناصر اسلم راجہ

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
100%
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 
اپنی رائے کا اظہار کریں -

اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں

کھیل خبریں

تازہ ترین خبریں

تازہ ترین تصاویر


>